دنیا

کابل میں گردوارے پر حملہ، 25 افراد ہلاک ہوگئے

شدت پسند تنظیم داعش نے حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے، جب کہ طالبان نے واقع میں ملوث ہونے کی تردید کی ہے۔

کابل : افغانستان کے دارالحکومت کابل میں مسلح افراد نے سکھوں کے گردوارے پر حملہ کیا ہے جس میں 25 افراد ہلاک ہو گئے ۔
خبر رساں اادارے اے ایف پی کے مطابق حملے کے بعد سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا۔شدت پسند تنظیم داعش نے حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے، جب کہ طالبان نے واقع میں ملوث ہونے کی تردید کی ہے۔

وزارت صحت کے ترجمان واحداللہ مایار کے مطابق حملے میں زخمی ہونے والے 15 افراد کو مقامی ہسپتال لایا گیا ہے جب کہ ایک بچہ بھی حملے میں ہلاک ہوا ہے جبکہ ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے۔
افغان وزارت داخلہ کے ترجمان نے اے ایف پی کو بتایا ہے کہ بدھ کی صبح آٹھ بجے کے قریب متعدد مسلح افراد عبادت گاہ میں داخل ہوئے۔سکھ ممبر پارلیمان نے اے ایف پی کو بتایا کہ حملے کے وقت گردوارے میں 150 سے زائد سکھ مذہبی رسومات کی ادائیگی کے لیے موجود تھے۔

افغانستان میں مذہبی اقلیتوں پر حملوں کی ذمہ داری اکثر داعش نے قبول کرتی ہے۔6 مارچ کو بھی داعش نے کابل میں ایک جلسے پر حملہ کیا تھا جس میں 32 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہوئے تھے۔
یاد رہےافغانستان پہلےہی سیاسی اور معاشی مشکلات کا شکار ہے۔ امریکہ نے افغانستان کو دی جانے والی مالی امداد میں کمی کرکے افغانستان کی مشکلات میں اضافہ کر دیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button
//ofgogoatan.com/afu.php?zoneid=3130392