خبریں

پنجاب میں سیاسی دھماکے کا پلان، نوازترین ملاقات کی کوششیں

نوازشریف نے ملاقات کو جہانگیر ترین کے اعتراف سے مشروط کردیا

پی ٹی آئی کے ناراض رہنما اور شوگر بحران کے ذمہ داروں میں شامل جہانگیر ترین اور مسلم لیگ ن کے سربراہ نوازشریف کی ملاقات کے لئے بھاگ دوڑ شروع ہوگئی۔ ایک سینئر صحافی جہانگیرترین اور نوازشریف کی ملاقات کرانے کے لئے مڈل مین کا کردار ادا کر رہے ہیں۔ نوازشریف نے جہانگیرترین سے ملاقات کے لئے یہ شرط رکھی ہے کہ جہانگیر ترین پہلے میڈیا کو بتائیں کہ 2018 کے انتخابات انجینئرڈ تھے، جہانگیرترین میڈیا کے سامنے اقرار کریں کہ وہ پی ٹی آئی کی حکومت بنوانے کے لئے استعمال ہوئے۔ جہانگیرترین کے میڈیا کے سامنے اعترافی بیان کے بعد ملاقات ہوسکتی ہے،

دوسری طرف نوازترین ملاقات ہونے سے پنجاب کی سیاست میں تہلکہ مچ جائے گا۔ جہانگیر ترین گروپ کا پنجاب میں ن لیگ سے ممکنہ اتحاد حکومت کے لئے پریشان کن ہوسکتا ہے۔ مرکز میں بی این پی مینگل نے بھی پی ٹی آئی حکومت سے علیحدگی کا اعلان کر دیا،، بی این پی مینگل کے پاس مرکز میں 4سیٹیں ہیں۔ مینگل سمیت تمام اتحادی پی ٹی آئی حکومت کی بقا کےلئے ضروری ہیں۔

پنجاب میں بڑے سیاسی دھماکے کیلئے لندن پلان۔  جہانگیر ترین اور نوازشریف کی ملاقات کرانے کی کوششیں تیز کر دی۔

 نوازشریف مشروط ملاقات پر راضی۔ جہانگیر ترین 2018 کے انتخابات کے بارے میڈیا پر بتائیں، اقرار کریں وہ پی ٹی آئی کی حکومت بنوانے کے لئے استعمال ہوئے، نوازشریف نے شرط رکھ دی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button