اہم خبرسیاسی

دو اراکینِ پارلیمنٹ اور عملہ میں کورونا وائرس کی تصدیق ، مزید اراکین کے نتائج موصول ہونا باقی

قومی اسمبلی اور سینیٹ کے اجلاس کے لیے صدرِ مملکت کی طرف سے کورونا ٹیسٹ کروانا لازمی قرار دیا گیا ہے

صدر مملکت عارف علوی نے 11 مئی کو قومی اسمبلی کا اجلاس طلب کرتے ہوئے اجلاس میں شرکت کے لیےارکان کا کورونا ٹیسٹ کروانا لازم قرار دیا تھا، قومی اسمبلی کا اجلاس کل اور سینیٹ اجلاس منگل کو ہو گا اور اس کے لئے ارکان کے کورونا ٹیسٹ لئے جارہے ہیں اور پارلیمانی اجلاسوں سے قبل کورونا وائرس کے کیسز سامنے آنے لگے ہیں۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ این آئی ایچ کے عملے نے ارکان پارلیمنٹ کے ٹیسٹ کے نمونے حاصل کر لئے ہیں، اب تک جن ارکان کے ٹیسٹ لئے گئے ہیں ان میں ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب، طاہرہ اورنگزیب، راجہ ظفرالحق، رانا ثنااللہ، مشاہد حسین،مائزہ حمید، عائشہ غوث پاشا، جنرل (ر)عبد القیوم اور سینیٹر سلیم ضیاء شامل ہیں، اور اب تک ان میں سے اب تک دو ارکان پارلیمنٹ اور پارلیمنٹ کے اسٹاف کی کورونا رپورٹ مثبت آچکی ہے، جب کہ باقی ارکان کی ٹیسٹ رپورٹ بھی آج شام تک جاری ہو گی۔
واضح رہے کہ سینیٹ اور قومی اسمبلی اجلاس میں شرکت کے لئے کورونا ٹیسٹ لازمی قرار دیئے گئے ہیں اور کورونا وائرس کا شکار ہونیوالے ارکان کا ایوانوں میں داخلہ بند ہو گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button